جمعرات‬‮   21   ‬‮نومبر‬‮   2019

تراڑکھل، سائیں شوکت کے قاتل گرفتار نہ ہو سکے


تراڑکھل، سائیں شوکت کے قاتل گرفتار نہ ہو سکے
قاتل گرفتار نہ کرنا اور لیت و لعل سے کام لینا پولیس کیلئے لمحہ فکریہ ہے، سردار عارف
تراڑکھل (تحصیل رپورٹر )مجذوب سائیں شوکت کے قاتل گرفتار نہ ہو سکے ۔ قاتلوں کی گرفتاری تھانہ تراڑکھل کیلئے لمحہ فکریہ ہے ۔ ورثا انتہائی غریب ہیں ۔ پولیس کے مطابق مکمل ایف آئی آر ، میڈیکل رپورٹ کے بعد ہو گی ۔ اب میڈیکل بھی ورثا کے ذاتی اخراجات پر موصول ہو چکی ۔ لیکن میڈیکل رپورٹ بند ہے ۔ پولیس تفتیش سے بھاگ رہی ہے ۔ قاتل اتنے با اثر ہیں کہ پولیس ہاتھ ڈالنے سے قاصر ہے ۔ ان خیالات کا اظہار سردار محمد عارف خان سیکرٹری نشرو اشاعت مسلم لیگ ن تراڑکھل نے اپنے تحریر بیان میں کیا ہے ۔ انھوں نے کہا کہ سائیں شوکت کے قاتل گرفتار نہ کرنا اور لیت و لعل سے کام لینا تراڑکھل تھانے کیلئے سوالیہ نشان ہے ۔ انھوں نے کہا کہ وزیر اعظم ، چیف سیکرٹری آزاد کشمیر ، آئی جی آزاد کشمیر معاملہ کا نوٹس لیں ۔ اور تراڑکھل تھانے میں چھے ماہ قبل قتل ہونے والے مجذوب غریب مزدور سائیں شوکت کی رپورٹ موجود ہے ۔ میڈیکل رپورٹ بھی تاخیر سے ملنے کے باوجود کاروائی نہ ہوان اس بات کی دلیل ہے کہ دال میں کچھ کالا ہے ۔ اگر فوری نوٹس نہ لیا گیا تو تراڑکھل کے عوام سڑکوں پر ہوں گے ۔ اگر امن و امان کا مسئلہ ہو ا تو اس کی ذمہ داری حکومت آزاد کشمیر سدھنوتی اور تراڑکھل کی انتظامیہ پر ہوگی ۔ قب اس کے لاوا پھٹے قاتلوںکو سامنے لایا جائے اور مقتول کے ورثا کو انصاف مہیا کیا جائے ۔ نیز پوسٹ مارٹم رپورٹ کو ایک ماہ سے زائد ہو چکا ہے ہسپتال والوں کو وصول ہو چکی لیکن نا معلوم وجوہات کی بنیاد پراس وقت تک اوپن نہ ہو سکی جس کی وجہ سے پیش رفت میںرکاروٹ ہے ۔
سردار عارف

© Copyright 2019. All right Reserved