اتوار‬‮   17   ‬‮نومبر‬‮   2019

بھارت ہندو ریاست بن چکا ہے،ذوالفقار ایڈووکیٹ


بھارت ہندو ریاست بن چکا ہے، راجہ ذوالفقار
انڈیا کے نعرے لگانے والے وظیفہ خور سیاست دان پابند سلاسل ہیں
چکسواری (سپیشل رپورٹر)پیپلز نیشنل الائنس کے صدر راجہ ذوالفقار ایڈووکیٹ نے کہا ہے کہ لیڈرشپ وہ ہوتی ہے جو غلام قوموں کو آزاد کراتی ہے جو مایوس لوگوں میں امید پیدا کرتی ہے لیکن بدقسمتی سے کشمیریوں کو1947میں وہ لیڈر شپ ملی جس نے آزاد قوم کو غلام بنا کر تقسیم کردیا انتہائی شرمناک تاریخ ہے اور اسکے ذمہ دار یہ روایتی سیاست دان اور حکمران ہیں جنہوں نے کشمیری قوم۔کے نام پر اقتدار کے مزے لوٹیاس کے بعد ہم دہلی اور اسلام آباد والوں کو مجرم ٹھہرا سکتے ہیں کشمیری سیاست دانوں نے جنہوں نے اس پار اور ادھر حکمرانی کے مزے لوٹے کشمیری قوم کے لیے کیا کیاماسوائے دہلی اور اسلام آباد والوں کی جی حضوری کرنے کے ان خیالات کا اظہار انھوں نے چک سواری کے مقامی ریسٹورنٹ ڈیرہ شنواری میں پیپلز نیشنل الائنس کے زیر اہتمام مٹینگ سے خطاب کرتے ہوئے کیا انھوں نے کہا کہ بھارت کے نعرے لگانے والے وظیفہ خور سیاست دان اسوقت پابند سلاسل ہیں عوام آج کرفیو کیوجہ سے جانوروں سے بھی بدتر زندگی گذارنے پر مجبور ہیں عوام کوکوئی پرسان حل نہیں جب دوسری ریاست کے مفادات کے لیے اپنی ریاست میں کام کریں گے تو پھیر آپ کے ساتھ وہی حشر ہوگا جو مقبوضہ کشمیر میں بھارتی نواز سیاست دانوں کے ساتھ اسوقت ہو رہا ہے کیونکہ بھارت کے اپنے مفادات ہیں اور اپنے مفادات کے لیے وہ کچھ بھی کرئے گا راجہ ذوالفقار ایڈووکیٹ نے کہا کہ پیپلز نیشنل الاہنس ہم نے پانچ اگست کے بھارتی اقدام کے بعد دس اگست کو روالاکوٹ کے مقام پر بنایا جس میں چھبیس جماعتیں شامل ہیں جس کا بنیادی مقصدریاست باشندہ قانون کی پوری ریاست بشمول گلگت و بلتستان میں بحالی ہے اس موقعہ پر ہمایوں پاشا یونس تریابی فضل کریم، ادریس شان چوھدری بشارت ، آصف کشمیری اور زاہد حسین نے بھی خطاب کیا۔

© Copyright 2019. All right Reserved