منگل‬‮   10   دسمبر‬‮   2019

تین کالم بیرسٹر سلطان


باتیں اور تقریریں بہت ہو چکیں، مقبوضہ کشمیر کی عوام کے لیے عملی کردار ادا کرنے کا وقت آ گیا ہے
متفقہ طور پر سیز فائر لائن کو توڑنے کا فیصلہ کر لیا،عمران خان کے سلامتی کونسل سے خطاب تک موخرہے
لوٹن( پ ر) آزاد کشمیر کے سابق وزیراعظم وپی ٹی آئی کشمیر کے صدر بیرسٹر سلطان محمود چوہدری نے کہا ہے کہ اسوقت ضرورت اس امر کی ہے کہ تمام کشمیری سیاسی و نظریاتی وابستگی سے بالاتر ہو کرمقبوضہ کشمیر کی آزادی کے ایک نظریے پر اکٹھے ہو جائیں۔ کشمیر ایشو فیصلہ کن موڑ میں داخل ہو چکا ہے کشمیر کی آزادی کے لیے باتیں اور تقریریں بہت ہو چکی ہیں اب آزاد کشمیر کے لوگوں کے لیے مقبوضہ کشمیر کی عوام کے لیے عملی کردار ادا کرنے کا وقت آ گیا ہے اس وقت کشمیر کاز کے لیے ریاست کی تمام سیاسی جماعتیں اور لیڈرشپ ایک پیج پر اکھٹی ہے ہم سب نے متفقہ طور پر سیز فائر لائن کو توڑنے کا فیصلہ کر لیا ہے وزیراعظم عمران خان کے اقوام متحدہ کی جنرل اسمبلی سے خطاب اور دورہ امریکہ کی وجہ سے اس کو کچھ وقت کے لیے موخر کیا ہے پاکستان حکومت اور پاکستان کی سیاسی جماعتوں نے کشمیر ایشو کے لیے جو کردار ادا کیا ہے وہ قابل تحسین ہے مگر مقبوضہ کشمیر کے موجودہ زہرہ گداز حالات ہم کشمیریوں سے عملی اقدامات کا تقاضا کر رہے ہیں مشکل کی اس گھڑی میں ہم کشمیری بھائیوں بہنوں کے ساتھ کھڑے ہوں گے میں آج21 ستمبر کو امریکہ کا دورہ کر رہا ہوں 27 ستمبر کو بھارتی وزیراعظم نریندر مودی کے جنرل اسمبلی سے خطاب کے موقع پر ہزاروں افراد اقوام متحدہ کے باہر احتجاجی مظاہرہ کر کے دنیا کو پیغام دیں گے کہ ہم مقبوضہ کشمیر کی عوام کے ساتھ ہیں آرٹیکل 35 اے اور آرٹیکل 370 کا خاتمہ ظالمانہ اور جابرانہ ہے جسے کشمیری مسترد کرتے ہیں نیز احتجاجی مظاہرہ میں مقبوضہ کشمیر میں لگے کرفیو کی بھی بھرپور مزمت کی جائے گی۔ ان خیالات کا اظہار سابق وزیراعظم بیرسٹر سلطان محمود چوہدری نے لوٹن میں بیرسٹر ملک اسرار کی اپنے ساتھیوں سمیت پی ٹی آئی کشمیر میں شمولیت کے موقع پر ایک جلسہ عام سے بطور مہمان خصوصی خطاب کرتے ہوئے کیا جلسہ کی صدارت ملک فضل داد نے کی جبکہ جلسہ سے لارڑ قربان حسین سابق وزیر ریاض حسین،صابق مئیر لوٹن، ریاض بٹ، کونسلر جویریہ چوہدری،کونسلر ڑاجہ عاصم،راجی ایوب راٹھور،راجہ الیاس،سید حسین شہید،راجہ اعظم ایڈووکیٹ،ملک مہربان،حاجی ملک پہلوان، محمد شبیر بابر اعوان چوہدری محمد اشرف اور دیگر نے بھی خطاب کیا سٹیج سیکرٹری کے فرائض اسلم بٹھہ اور آزاد جرال نے سرانجام دئیے اس موقع پر پی ٹی آئی کشمیر میں شمولیت اختیار کرنے والوں میں بیرسٹر ملک اسرار، حاجی ملک فضل داد،إلک پنن خان، اعجاز احمد، ظہیر احمد، ابرار احمد، محمد صغیر، محمد ظہیر، محمد رئیس،مہربان اعظم، قیصر ان اعظم،شہزاد ملک، حاجی طاہر،اسرار ملک، غلام نبی، جبار ،چوہدری فرید،ملک رفیق، عابد حسین،افتخار چوہدری،گلریز فضل،قمر جاوید،ملک جاوید،عرفان خان،عامر خان،قمر مغل،شفیق ملک،ذوالقرنین ناز، ساجد ملکظروف قریشی اور دیگر شامل تھے۔ سابق وزیراعظم بیرسٹر سلطان محمود چوہدری نے اپنے خطاب میں مزید کہا کہ مقبوضہ کشمیر میں اس وقت جو تحریک چل رہی ہے وہ خالصتاً وہاں کے لوگوں کی ہے بھارت 9 لاکھ فوج کی وجہ سے لوگوں کے جذبہ حریت کو دبا نہیں سکتا۔ساری دنیا نے دیکھ لیا مقبوضہ کشمیر میں کرفیو کو لگے 47 دن گزر چکے مگر کشمیری آج بھی اپنے موقف پر ڈٹے ہوئے ہیں اور اپنی منزل تک محاذ پر ڈٹے رہیں گے برطانیہ اور امریکہ کے دورے کے دوران میں ڈیڑھ کروڑ کشمیریوں کی ترجمانی کرتے ہوئے عالمی برادری کی توجہ کشمیر ایشو کی طرف مبذول کرواں گا۔
بیرسٹر

© Copyright 2019. All right Reserved