ہفتہ‬‮   24   اگست‬‮   2019

پشاور ، پبلک ٹرانسپورٹ بند ،ٹیکسی اوررکشہ ڈرائیوروں کی چاندی

منہ مانگے کرائے وصول،لوگوں کو آمد ورفت میں شدید مشکلات،لڑائی جھگڑے
پبلک ٹرانسپورٹ نہ ہونے پر شہریوں کو دونوں ہاتھو ں سے لوٹنے کا سلسلہ جاری رہا

پشاور(بیورورپورٹ)صوبائی دارالحکومت پشاوراورمضافاتی علاقوں میں عیدالاضحی کے د وسرے دن پبلک ٹرانسپورٹ کی چھٹی ہونے کے نتیجے میں ٹیکسی اوررکشہ ڈرائیوروں نے لوگوں سے منہ مانگے کرائے وصول کئے اور لوگوں کو آمد ورفت میں شدید مسائل سے دو چار کیااس دوران ڈرائیوروں اور سواریوں میں معمولی لڑائی جھگڑے بھی ہوتے رہے تاہم رکشہ ڈرائیور سواریوں سے کم پیسے لینے کیلئے تیارنہیں تھے عیدالاضحی کے پہلے ا وردوسرے دن موسمی قصائیوں کی طرح ٹیکسی اور رکشہ ڈرائیوروں نے بھی بہتی گنگامیں ہاتھ دھوتے ہوئے پبلک ٹرانسپورٹ کی عدم موجود کا خوب فائدہ اٹھایا اس دن سڑکوں پر ویگن اور بسوں کی عدم موجودگی کے نتیجے میں لوگوں نے زیادہ تر ٹیکسی اور رکشے کی سواریاں کیں تاہم رکشہ ڈرائیوروں نے بھی سڑکوں پر پبلک ٹرانسپورٹ نہ ہونے کافائدہ اٹھاتے ہوئے ساٹھ روپے کی مسافت کی جگہ سو اورڈیڑھ سو روپے لوگوں سے وصول کئے ہیں اس دوران رکشہ ڈرائیوروں اور سواریوں کے مابین توتو میں میں بھی ہوتی رہیں جس کے نتیجے میں عیدکے پہلے اوردوسرے روز ٹیکسی اوررکشہ ڈرائیوروں نے لوگوں کو دونوں ہاتھوں سے لوٹنے کابازار گرم کررکھا عوامی حلقوں نے عید کے دن ٹیکسی اور رکشہ ڈرائیوروں کی جانب سے لوٹ مار پر شدید تشویش کااظہار کیاہے ۔
چاندی

© Copyright 2019. All right Reserved