اتوار‬‮   5   جولائی   2020
 
 

ڈی سی ایبٹ آباد کی کھلی کچہری،بانڈی چمیالی کےمکینوں کا سرکاری محکموں کی ناقص کارکردگی پر احتجاج

سرکاری افسران بات نہیں سنتے، بی ایچ یو میں سٹاف کی کمی ، اساتذہ بچوں کو معیاری تعلیم نہیں دے رہے ہیں
شادی تقریبات میں ہوائی فائرنگ کا سلسلہ جاری ہے،شرکاء،عوامی مسائل فوری طور پرحل کیے جائیں،عامر آفاق کاخطاب
ایبٹ آباد( ڈسٹرکٹ رپورٹر) ایبٹ آباد ڈپٹی کمشنر عامر آفاق کی بانڈی چمیالی میں کھلی کچہری مقامی افراد نے شکایات کے انبار لگا دیئے ہیں صحت تعلیم جنگلات پولیس وائلڈ لائف جی ڈی اے سمیت دیگر سرکاری محکموں کے خلاف عوام پھٹ پڑے سرکاری محکموں کے افسران بات نہیں سنتیں سہولیات کا فقدان ہے ڈپٹی کمشنر عامر آفاق نے موقع پر مختلف سرکاری محکموں کے افسران سے شکایات کے جوابات طلب کر کے ان مسائل کے حل کا حکم دیا ڈپٹی کمشنر عامر آفاق نے بانڈی چمیالی کے سرکاری سکول میں عوامی کھلی کچہری منعقد کی جس میں محکمہ صحت۔جنگلات۔وائلڈ لائف۔پولیس۔جی ڈی اے۔ایگری کلچر۔سی این ڈبلیو۔محکمہ مال۔سمیت دیگر سرکاری محکموں کے افسران نے شرکت کی ہے اس موقع پر مقامی افراد نے شکایات کے انبار لگا دیئے اور تمام سرکاری محکموں کی غیر تسلی بخش کارکردگی کا پول کھول کر رکھ دیا ہے مقامی افراد کا کہنا تھا کہ علاقہ میں صحت کی سہولیات کا فقدان ہے بی ایچ یو میں سٹاف کی کمی ہے اساتذہ سکولز میں بچوں کو معیاری تعلیم نہیں دے رہے ہیں علاقوں میں جنگلی حیات فصلوں کو نقصان پہنچا رہے ہیں شادی کی تقریبات میں پابندی کے باوجود ہوائی فائرنگ کا سلسلہ برقرار ہے علاقہ منشیات کا گڑھ بن چکا ہے سیاحتی علاقہ ہونے کے باوجود روڈ سمیت دیگر بنیادی سہولیات کا فقدان ہے قیمتی درختوں کو کاٹ کر جنگلات کو تباہ کیا جا رہا ہے بجلی سپلاء کے دوران فنی خرابی ہو جائے تو دنوں تک مرمت نہی ہوتی ہے واپڈا کا سٹاف بھی کم ہے پورے علاقے کیلئے صرف ایک لائین مین موجود ہے علاقہ میں پانی کی سپلائی کا نظام مفلوج ہے پانی کی سپلائی میں مشکلات کا سامنا ہے ترقیاتی کام بھی تیزی کے ساتھ نہیں ہو رہیں ہیں جرائم میں اضافہ ہو چکا ہے عوامی شکایات پر ڈپٹی کمشنر نے تمام سرکاری محکموں کے افسران کو حکم دیا کہ ان مسائل کو فوری طور پر حل کر کے عوام کو ریلیف دیا جائے ۔
کھلی کچہری

 
© Copyright 2020. All right Reserved