منگل‬‮   23   جولائی   2019

رشکئی اکنامک زون کے قیام سے ڈیڑھ لاکھ افراد کو روزگار ملے گا ،چینی سفارتکار

پاکستان سےتعلقات مزید بڑھائیں گے، خواہش ہے سی پیک کے ثمرات خیبر پختونخوا میں دکھائی دیں
سی پیک سے علاقے میں ترقی کا نیا دور شروع ہوگا،چن وی کا چائنہ ونڈو کے دورے کے موقع پر میڈیا سے گفتگو
پشاور( بیورو رپورٹ ) پاکستان میں متعین چینی سفارت کار قونصلر چن وی نے کہا ہے کہ رشکئی اکنامک زون کے قیام کے بعد جہاں سرمایہ کاروں کی بڑی تعداد اس عظیم الشان منصوبے میں سرمایہ کاری کرے گی وہیں ڈیڑھ لاکھ افراد کو روزگار میسر آئے گا جس سے صوبہ خیبر پختونخوا کی معیشت میں بہتری آئے گی۔ان خیالات کا اظہار انہوں نے پشاور میں اپنی نوعیت کے منفرد چینی ثقافتی مرکز چائنہ ونڈو کے دورے کے موقع پر میڈیا سے گفتگو میں کیا۔دیگر چینی سفارت کار بھی ان کے ہمراہ تھے۔مسٹرچن وی کا کہنا تھا کہ چینی حکومت خاص طور پر پاکستان میں متعین چینی سفیر یاؤ جنگ کی خواہش ہے کہ سی پیک کے ثمرات پشاور اور خیبر پختونخوا میں دکھائی دیں اور انہیں خوشی ہے کہ صوبے میں سی پیک کے تحت چھ بڑے منصوبوں پر کام ہو رہا ہے۔انہوں نے کہا کہ پاکستان اور چین کی دوستی بھائی چارے کا ایک عملی ثبوت ہے اور جس طرح دونوں برادر ممالک کے تعلقات مزید مستحکم ہو رہے ہیں اس سے اندازہ لگایا جا سکتا ہے کہ دونوں ملک ایک دوسرے کے کتنے قریب ہیں۔ایک سوال کے جواب میں چینی سفارت کار کا کہنا تھا کہ سی پیک پاکستان میں معاشی و اقتصادی ترقی کا منصوبہ ہے جو نہ صرف خطے میں امن کا باعث بنے گا بلکہ کئی ممالک کو تجارت کے ذریعہ آپس میں ملائے گا۔ چن وی نے کہا کہ پشاور میں چائنہ ونڈو کا قیام پشاور اور خیبر پختونخوا کے عوام کو ایک دوسرے کے قریب لانے میں اہم ثابت ہو گا ۔اس ثقافتی مرکز نے بہت کم عرصہ میں نہ صرف خیبر پختونخوا بلکہ سارے ملک میں شہرت حاصل کی ہے جو بلاشبہ لائق ستائش ہے۔انہوں نے کہا کہ چائنہ ونڈو کے پلیٹ فارم سے پاک چین دوستی پر مقابلہ مضمون نویسی کے علاوہ کئی تقریبات کا انعقاد بھی مستقبل میں کیا جائے گا۔
چینی قونصلر

© Copyright 2019. All right Reserved