اتوار‬‮   16   جون‬‮   2019

وفاقی حکومت ہزارہ وال قوم سے ہاتھ کر گئی

حکومت نے صوبہ ہزارہ کی تحریک اسمبلی میں پیش نہ کر کے دشمنی کا ثبوت دیا
ایبٹ آباد( ڈسٹرکٹ رپورٹر) پاکستان تحریک انصاف کی وفاقی حکومت ہزارہ وال قوم سے صوبہ ہزارہ کے نام ہاتھ کر گئی جنوبی پنجاب کی وفاقی حکومت نے قومی اسمبلی میں تحریک پیش کی جو منظور کرکے کمیٹی کے حوالے کردی گئی ہزارہ کے نمائندگان قومی اسمبلی نے آنکھیں بند کر لیں کسی کو اسمبلی میں صوبہ ہزارہ کے حوالے سے آواز بلند کرنے کی توفیق نہ ہوئی گزشتہ روز قومی اسمبلی کے اجلاس میں وفاقی حکومت نے جنوبی پنجاب کی تحریک پیش کی جس کی مسلم لیگ ن نے مخالفت کی جبکہ پاکستان پیپلزپارٹی کے اراکین نے حمایت کی جنوبی پنجاب صوبے کی تحریک بھاری اکثریت سے منظور کرکے کمیٹی کے حوالے کردی گئی جبکہ حکومت نے صوبہ ہزارہ کی تحریک اسمبلی میں پیش نہ کر کے ہزارہ دشمنی کا ثبوت دیا اس موقع پر ہزارہ ڈویثزن بھر کے نمائندگان قومی اسمبلی تحریک انصاف اور ن لیگ خاموش تماشائی بنے رہے کسی کو صوبہ ہزارہ کا نام لینے کی توفیق نہ ہوئی ایک ہفتہ قبل ایبٹ آباد سے تعلق رکھنے والے تحریک انصاف کے ایم این اے علی خان جدون اور سابق ڈپٹی اسپیکر قومی اسمبلی مرتضٰی جاوید عباسی تحریک پیش کر کے ایک دوسرے پر پوائنٹ سکورنگ کرتے ہے۔

© Copyright 2019. All right Reserved