اتوار‬‮   25   اگست‬‮   2019

خوست، جھڑپ ،فورسز کی فائرنگ،دوحملہ آور وں سمیت 5 جاں بحق

موٹرسائیکل سوار حملہ آوروں سے خودکش جیکٹیں برآمد،فراہ میں سکول تباہ

کابل ،خوست( نیوز ایجنسیاں)افغانستان کے مشرقی صوبے خوسٹ میں طالبان اور سرکاری فورسز کے درمیان جھڑپوں میں5افراد جاں بحق اور13زخمی ہوگئے ۔ ایک واقعہ اس وقت پیش آیا جب دو خودکش بمبار صوبائی دارالحکومت خوسٹ میں داخل ہونے کی کوشش کررہے تھے کہ سیکیورٹی فورسز نے انھیں گولی ماردی۔ حملہ آوار موٹر سائیکل پر سوار تھے ، دہشتگردوں سے خودکش جیکٹیں اور بارودی مواد برآمد ہوا ہے۔ایک ا ور واقعہ میں 3افراد جاں بحق اور13زخمی ہوگئے یہ جھڑپ صوبے کے تانی ضلع میں طالبان اور سیکیورٹی فورسز کے درمیان ہوئی جو کچھ دیر جاری رہی ہلاک اور زخمی ہونے والوں کا تعلق دو مسلح دہشتگردگروپوں سے ہے۔ فراہ میں دھماکا خیز مواد سے لڑکیوں کے ایک اسکول کو تباہ کردیا۔ فراہ کے گائوں توسک میں از سرنو تعمیر ہونے والے بنفشہ گرلز ہائی اسکول میں نامعلوم مسلح افراد نے داخل ہوکر دھماکا خیز مواد سے اسکول کی عمارت کو دوسری بار تباہ کر دیا اور اندھا دھند فائرنگ بھی کی۔ اسکول کو دو سال قبل بھی مسلح افراد نے نذر آتش کردیا تھا اس کے باوجود اسکول میں درس و تدریس جاری تھی اور 500 لڑکیاں زیر تعلیم تھیں ۔افغانستان کی وزارت تعلیم کے اعداد و شمار کے تحت اب بھی ساڑھے 3 لاکھ سے زائد بچے تعلیم سے محروم ہیں اور ملک بھر میں تقریبا 900 سے زائد اسکول سیاسی حکومتوں کے قیام کے باوجود تاحال بند ہیں۔
افغان واقعہ

© Copyright 2019. All right Reserved