ہفتہ‬‮   17   اگست‬‮   2019

اکرم درانی کالج بنوں کے طلباء اور فیکلٹی ممبر سے ریکوری کی منظوری

رہائشی کالونی میں رہائش پذیر عملے سے تنخوا ہ کی کٹوتی بند کردی گئی
پشاور(بیورورپورٹ)
خیبرپختونخواحکومت نے اکرم خان درانی کالج بنوں کے بعض طلباء اور فیکلٹی ممبر سے ریکوری کی باقاعدہ منظوری دیدی ہے۔شیرتعلیم خیبرپختونخوا ضیاء اللہ بنگش کی سربراہی میں اکرم خان درانی کالج بنوں کے بورڈ آف گورنر زکا اجلاس ہوا جس میں بورڈ آف گورنرز کے ممبران نے شرکت کی اس موقع پر سابقہ اجلاس میں کئے گئے فیصلوں کی منظوری دی گئی اور انکوائری رپورٹ میں مجوزہ فیصلوں سے اتفاق کیاگیا بورڈ آف گورنرز نے ذمہ دار طلباء اورفیکلٹی ممبر سے 9,42,900 روپے کی ریکوی کی منظوری بھی دی جس کے تحت ذمہ دار 16 طلباء اور 4 فیکلٹی اراکین سے یہ رقم وصول کی جائیگی ۔اجلاس میں یہ بھی فیصلہ کیاگیا کہ مالی سال 2018 میں منظور شدہ 10 فیصد ایڈہاک الاؤنس کا باقی 5 فیصد بھی ملازمین کو جاری کیاجائے کیونکہ کالج مالی لحاظ سے مستحکم ہے اس کے علاوہ بورڈ نے ایک فیکلٹی ممبر کو سٹڈی کیلئے چھٹی کی منظوری بھی دی اورکالج کی رہائشی کالونی میں رہائش پذیر عملے سے تنخوا ہ کے 5 فیصد کے حساب سے کٹوتی بند کرنے کی منظوری بھی دی گئی۔ ضیاء اللہ خان بنگش نے کالج کا آڈٹ فوراً کرنے کی ہدایت بھی جاری کی۔ انہوں نے کہاکہ موجودہ صوبائی حکومت عوام کو بہترین تعلیمی سہولیات فراہم کررہی ہے۔ انہوں نے کہاکہ اکرم خان درانی کالج کے تمام مسائل ترجیحی بنیادوں پر حل کئے جارہے ہیں۔ انہوں نے طلباء اورفیکلٹی اراکین کو ہدایت کی کہ تمام تر توجہ معیاری تعلیم پر دی جائے۔ مشیرتعلیم نے کالج کے پرنسپل کو ہدایت کی کہ اس اجلاس میں کئے گئے فیصلوں پر فوراً عمل درآمد کیاجائے۔
اکرم درانی کالج

© Copyright 2019. All right Reserved