بدھ‬‮   21   اگست‬‮   2019

مسلسل روڈ بندش، نتھیا گلی کا نوجوان ہسپتال نہ پہنچنے سے جاں بحق

نوجوان کی اچانک موت پر والدین پر غشی کے دورے پڑنا شروع ہو گئے
ایبٹ آباد( ڈسٹرکٹ رپورٹر) مسلسل روڈ بندش نتھیا گلی کا نوجوان ہسپتال نہ پہنچنے سے دم توڑ گیا نتھیا گلی سے توحید آباد تک مسلسل پندرہ دن سے مین رود برفباری کی وجہ سے بند ہے جس سے کنڈلہ کا نوجوان محمد نعیم ولد یوسف جس کا بلڈ پریشر سردی کی وجہ سے اچانک لو ہو گیا اور روڈ کی بندش کی وجہ سے وہ بروقت ہسپتال نہ پہنچ سکا جس سے وہ چار پائی پر ہی پڑے ایڑیاں رگڑ رگڑ کر جان کی بازی ہار گیا والدین اور رشتہ دار نوجوان کے پاس بے بسی کی تصویر بنے کھڑے رہے اور اس کو تڑپتا دیکھ کر آنسو بہاتے رہے نوجوان کی اچانک موت پر والدین پر غشی کے دورے پڑنا شروع ہو گئے اور والدین سمیت سب لوگ محکمہ فرنیٹیئر ہائی وے، ٹھیکیدار صالح اعجاز عباسی کو بدعائیں دیتے رہے نوجوان نعیم کی موت پر غفلت برتنے پر ٹھیکیدار کے خلاف تھانہ ڈونگا گلی میں رپورت درج کروا دی گئی ٹھیکیدار اگر روڈ صاف کرتا تو نوجوان ہسپتال پہنچ جاتا اور اسکی زندگی بچ جاتی۔
جاں بحق

© Copyright 2019. All right Reserved