05:36 pm
(سیکرٹری کشمیرافیئرزکی ملاقات)ہنزل پراجیکٹ کے ٹینڈرمیں تاخیرافسوسناک ہے(وزیراعلیٰ)

(سیکرٹری کشمیرافیئرزکی ملاقات)ہنزل پراجیکٹ کے ٹینڈرمیں تاخیرافسوسناک ہے(وزیراعلیٰ)

05:36 pm

اسلام آباد (اوصاف نیوز)وزیر اعلی گلگت بلتستان حافظ حفیظ الرحمن سے سیکر ٹری کشمیر افئیرز کی ملاقات ،چیف الیکشن کمشنر ،ججز تعنیاتی اور بجلی کے منصوبوں کے حوالے سے تبادلہ خیال،وزیر اعلی نے اس موقعہ پر کہا کہ ہنیزل بیس میگاواٹ جو 2016سے پی ایس ڈی پی میں منظور ہے مسلم لیگ کی وفاقی حکومت اور میاں نواز شریف نے گلگت کے عوام کو لوڈ شیڈنگ سے بچانے کے لئے منظور کیا تھا جو پہلے ہی ایک سابق سکیر ٹری کشمیر افئیر کی وجہ سے
غیر ضروری تاخیر کا شکار ہوا اس کے بعد نو مہینے ٹینڈر کے قانونی مراحل میں گزر گئے اب جب تمام مراحل مکمل ہو کر کام کا آغاز ہونا تھا پھر سے رکاوٹیں کھڑی کر دی گئیں گلگت کے عوام پہلے سے ہی بجلی کی لوڈ شیڈنگ سے اکتا چکے ہیں اس منصوبے میں غیر ضروری تاخیر سے عوام مزید مایوس ہوں گے غیر ضروری تاخیر افسوس ناک ہے ، وزیر اعلی نے کہا کہ ہمیں اس سے کوئی غرض نہیں کہ اس منصوبے کا ٹینڈر کس کو ملتا ہے میرٹ پر جس کو بھی ملے ہمیںہم چاہتے ہیں کہ اس منصوب پر بروقت کام مکمل ہو ،جو کمیٹی سکیرٹری ورکس کی سربراہی میں تشکیل دی گئی تھی اس نے اپنے میرٹ سے ہٹ کر رپورٹ دی ہے اس پر محکمانہ طور پر تحقیقات تو ہم کریں گے لیکن وفاق اپنی ذمہ داریاں پوری کرے اور اس رپورٹ کو واپس کرے جس پر سکیر ٹری کشمیر افئیر ز نے وزیر اعلی کو یقین دھانی کرائی کہ ہماری کوشش ہوگی کہ اس اہم منصوبے پر غیر ضروری تاخیر نہ ہو اور ہم کوشش کریں گے کہ جلد از جلد ٹینڈر ہو جائے وزیر اعلی نے ججز تعنیاتی اور چیف الیکشن کمشنر کی تعنیاتی کے حوالے سے بھی کہا کہ ان اہم عہدوں میں بروقت تعنیاتیاں نہ ہونے کی وجہ سے انصاف کا عمل سست پڑ چکا ہے جس پر سکیر ٹری کشمیر افئیر نے کہا کہ گلگت بلتستان حکومت نے چیف الیکشن کمشنر اور ججز تعنیاتی کے حوالے سے جو سمری ارسال کی تھی وہ ہم نے وزیر اعظم آفس ارسال کی ہے جو تاحال واپس ہمیں موصول نہیں ہوئی ہے ۔